قادیانیوں سے سوالات

کیا راست باز کا کام لعنت کرنا؟

سوال نمبر:91  مرزا نے اپنی کتاب (ازالہ اوہام حصہ دوم ص۳۵۶، خزائن ج۳ ص۴۵۶) پر لکھا ہے کہ: لعنت بازی صدیقوں کا کام نہیں، مؤمن لعان نہیں ہوتا۔

دوسری جگہ مرزاغلام احمد قادیانی نے اپنی کتاب (نور الحق ص118تا122، خزائن ج۸ ص158تا162) میں نمبرشمار کر کے ایک ہزار مرتبہ صرف لفظ لعنت لکھا ہے۔ اب سوال یہ ہے کہ پہلے حوالہ کے مطابق لعنت بازی صدیقوں کا کام نہیں۔ مؤمن لعان نہیں ہوتا اور دوسرے حوالہ کے مطابق مرزاقادیانی نے ایک ہزار مرتبہ لعنت کی ہے تو کیا مرزائی بتائیں گے کہ مرزاقادیانی جھوٹا اور کذاب تھا؟ صدیق اور راست باز نہ تھا؟ دوسرا یہ کہ مرزاقادیانی لعنت کرنے کی وجہ سے خود مؤمن نہ رہا کیا خیال ہے؟

کیا نبی گالیاں دیتا ہے؟

سوال نمبر:92   مرزاغلام احمد قادیانی نے اپنے مخالفین کو حروف تہجی کے اعتبار سے سینکڑوں گالیاں دی ہیں۔ کیا قادیانی بتائیں گے کہ مرزاغلام احمد قادیانی جیسی فصاحت اپنے لئے مانگنے پر تیار ہیں؟ اور گالیاں دینا شریف آدمی کا کام ہے یا بازاری آدمی کا؟

حالانکہ حضورصلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: میں لعنت کرنے والا بنا کر نہیں بھیجا گیا۔ میں گالیاں دینے والا بنا کر نہیں بھیجا گیا۔ گالیاں دینا نبی کا کام اور اس کی صفت نہیں۔ اب سوال یہ ہے کہ مرزاقادیانی گالیاں دے تو بھی نبی؟ کیا قادیانی شرافت گالیوں کی اجازت دیتی ہے؟

کیا مرزاقادیانی کی جماعت بے تہذیب، درندہ صفت؟

سوال نمبر:93   مرزاغلام احمد قادیانی اپنی کتاب (شہادۃ القرآن ص2، خزائن ج6 ص396) پر لکھتا ہے: مگر میں دیکھتا ہوں کہ یہ باتیں ہماری جماعت کے بعض لوگوں میں نہیں بلکہ بعض میں ایسی بے تہذیبی ہے۔ اگر میں درندوں میں رہوں تو ان بنی آدم سے اچھا ہے۔ اب قادیانی بتائیں کہ وہ درندہ رہنا پسند کریں گے؟ یا مرزاغلام احمد قادیانی کو چھوڑ کر اشرف المخلوقات بننا پسند فرمائیں گے؟

نیز مرزاقادیانی نے اپنی جماعت کو بے تہذیب وغیرہ کہا ہے۔ کیا اب مرزائیوں میں تہذیب آچکی ہے؟ جب کہ مرزاقادیانی کی موجودگی میں نہیں تھی؟ اگر تمہیں کچھ تہذیب اور سمجھ ہے؟ تو مرزاقادیانی کی جماعت کو کیوں نہیں چھوڑتے؟ وہ تمہیں بے تہذیب وغیرہ لکھے اور تم اسے نبی مانو؟۔ واقعی تمہاری حس اور شعور ختم ہوچکا ہے۔

کیا نبی امتی کی تقلید کر سکتا ہے؟

سوال نمبر:94   مرزاغلام احمد قادیانی نے اپنی کتاب (ملفوظات ج۹ ص۱۷۰) پر لکھا ہے کہ: سوہمارے نزدیک سب سے اوّل قرآن مجید ہے۔ پھر احادیث صحیحہ جن کی نسبت تائید کرتی ہے۔ اگر کوئی مسئلہ ان دونوں میں نہ ملے تو پھر میرا مذہب یہی ہے کہ حنفی مذہب پر عمل کیا جاوے۔ کیونکہ ان کی کثرت اس بات کی دلیل ہے کہ خداتعالیٰ کی مرضی یہی ہے۔  سوال یہ ہے کہ مرزاغلام احمد قادیانی اپنی کتاب (ایک غلطی کا ازالہ ص3، خزائن ج18ص207) پر لکھتا ہے کہ: اس وحی الٰہی میں اﷲ نے میرا نام محمد رکھا اور رسول بھی۔

معلوم ہوا مرزاقادیانی مدعی نبوت ہے اور پھر ایک نبی کا یہ کہنا کہ قرآن وسنت کے بعد حنفی مذہب پر عمل کیا جائے۔ کیا اس سے غیرنبی کا نبی پر فائق ہونا لازم نہیں آتا؟ کیا مرزاقادیانی کا یہ کہنا نبوت کے منصب کی توہین نہیں؟ کیا نبی کا امتی کی تقلید کرنا یہ نبی کی توہین نہیں؟

کیا نبی بدعت پر عمل کرتا ہے؟

سوال نمبر:95   مرزا غلام احمد قادیانی نے اپنی کتاب (ملفوظات ج۲ص208) پر لکھا ہے کہ: لوگوں نے جو اپنے نام حنفی شافعی وغیرہ رکھے ہیں یہ سب بدعت ہیں۔

نیز اس نے اپنی کتاب (ملفوظات ج9ص170) پر لکھا ہے کہ: میرا مذہب تو یہی ہے کہ حنفی مذہب پر عمل کیا جائے۔سوال یہ ہے کہ ایک جگہ مرزا قادیانی حنفی نام کو بدعت کہہ رہا ہے اور دوسری جگہ خود حنفی مذہب کی تائید کررہا ہے۔ کیا نبی بدعت کو ختم کرنے کے لئے آتے ہیں یا اپنے قول وعمل سے اس کی تائید کرتے ہیں؟۔

مرزا قادیانی نماز کس وقت پڑھتا تھا؟

سوال نمبر:96   مرزا قادیانی نے اپنی کتاب (اربعین ضمیمہ نمبر3،۴ص4، خزائن ج17ص471) پر لکھا ہے کہ: بسا اوقات سو سو دفعہ رات کو یا دن کو پیشاب آتا ہے اور اس قدر کثرت پیشاب سے جس قدر عوارض ضعف وغیرہ ہوتے ہیں میرے شامل حال ہیں۔

اب سوال یہ ہے کہ مرزا قادیانی دن یا رات میں سو سو دفعہ پیشاب کرتا تھا۔ کوئی قادیانی بتاسکتا ہے کہ مرزا قادیانی کس وقت نماز پڑھتا تھا؟۔ کھانا کھاتا تھا۔ بیوی کے پاس جاتا تھا۔ کتابیں لکھتا تھا۔ مریدوں کو ملتا تھا۔ سوتا تھا؟۔ جبکہ کثرت پیشاب کی وجہ سے ضعف بھی ہوجاتا تھا؟۔